49

اپنے بچوں سے بھی زیادہ پیارے لگتے ہیں یہ۔۔۔پاکستانی شوبز انڈسٹری کی پیاری پیاری نانیاں دادیاں

یہ بات تو سچ ہے کہ اصل سے سود پیارا ، اس لئے اس بات سے نہیں انکار کہ نانیوں اور دادیوں کو اپنے بچوں کی اولاد سے ہے سب سے زیادہ پیار۔۔۔پاکستانی شوبز انڈسٹری میں کبھی ساس، کبھی ماں اور کبھی بہنوں کا کردار اداک رنے والی یہ حسین خواتین اپنے پوتے پوتیوں، یا نواسے نواسیوں کی بڑی ہی لاڈلی ہوتی ہیں۔۔

ماہ نور بلوچ
ماہ نور بلوچ وہ خوبصورت نانی ہیں جو آج تک اتنی ہی حسین اور جوان دکھتی ہیں ۔۔۔وہ صرف پندرہ سال کی تھیں جب ان کی شادی ہوئی اور انہوں نے اپنی بیٹی لیلیٰ حمید کی شادی تین سال پہلے کی۔۔۔دو سال پہلے وہ نانی کے درجے پر فائض ہوگئیں اور سنا ہے کہ ماہنور کو اپنے اس رتبے سے بہت زیادہ پیار ہے ، وہ مانتی ہیں کہ شاید انہوں نے اپنی بیٹی کو اتنا پیار نا دیا ہو جو اب انہیں اس کے بچے سے ہے۔۔۔

بشریٰ انصاری
یہ وہ نانی ہیں جن کے آتے ہی نواسے نواسیوں کی تو عید ہی ہوجاتی ہوگی۔۔۔ہر لمحہ ہنستی مسکراتی اور بات بات پر لطیفے سناتی بشریٰ انصاری اپنی بیٹیوں سے زیادہ اپنے نواسوں کی لاڈلی ہیں۔۔۔ان کی دو بیٹیاں ہیں نریمان انصاری اور میرا انصاری۔۔۔اور ان دونوں بیٹیوں کے چار بچے ہیں۔۔۔بشریٰ انصاری کو جیسے ہی وقت ملتا ہے وہ بھاگ کر بیرون ملک اپنے نواسوں سے ملنے جاتی ہیں کیونکہ وہ انہیں توتلی زبان میں کہانیاں سناتے ہیں اور ان سے اپنی ماؤں کی شکایتیں بھی کرتے ہیں۔۔۔یہ پیار وہ ہے جو بشریٰ انصاری کی اصلی زندگی کا حصہ ہے۔۔۔

صبا فیصل
صبا فیصل نے کچھ عرصہ پہلے ہی اپنے بیٹے کی شادی کی ہے اور ابھی دادی تو نہیں بنیں لیکن اپنی بیٹی سعدیہ فیصل کے بیٹے کی نانی ضرور ہیں۔۔۔اور آپ انہیں کوئی معمولی نانی مت سمجھئے گا۔۔۔سعدیہ یا ان کے شوہر کی ہمت نہیں ہوتی کہ وہ اپنے بچے کو کچھ بھی کہہ سکیں نانی کی موجودگی میں۔۔۔نانی کا لاڈلا بہت ہی شرارتی ہے اور صبا فیصل یہ مانتی تو ہیں لیکن انہیں یہ شرارتیں بہت پسند ہیں۔۔۔

شاہدہ منی
شاہدہ منی ایک ایسی نانی ہیں جن کا نانی بننے کا سفر زیادہ پرانا نہیں لیکن وہ اس سفر میں کافی کامیاب جا رہی ہیں اور لاڈ پیار کی ایک الگ دنیا بسا کر چلتی ہیں۔۔۔ان کی بیٹی مہرین عطا کی شادی انہوں نے وی جے، ڈیزائنر اوراداکار فہد شیخ کے ساتھ دو سال پہلے کی اور اب وہ ان کے بیٹے کے ساتھ اپنا پیارا سا رشتہ بخوب نبھارہی ہیں-

اسماء عباس
یہ دنیا کی سب سے پیاری دادی ہیں۔۔۔اسماﺀ عباس جب اپنی پوتیوں کے ساتھ ہوتی ہیں تو کوئی ان کی عمروں کا فرق نہیں بتا پاتا۔۔۔وہ اپنی بڑی پوتی سے اتنی قریب ہیں کہ وہ انہیں دیکھتے ہی اپنے سارے کام چھوڑ کر ان سے لپٹ جاتی ہے اور گھر کی ساری خبریں بھی ان تک پہنچاتی ہے۔۔۔اسماء عباس نے اپنی زندگی کے اس رشتے کو سب سے معصوم انداز میں اپنایا ہے۔۔۔کیونکہ وہ اپنی پوتیوں سے انہی کی زبان میں بات کرتی ہیں۔۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں