59

نوٹ اصلی ہے یا نقلی پہچان کیسے کی جائے؟ نقلی کرنسی کو کیسے بنایا جاتا ہے؟ جانیں

پاکستان میں جعلی کرنسی نوٹ بنانے کے پیچھے متعدد کہانیاں پائی جاتی ہیں۔ صرف پاکستان ہی نہیں بلکہ تمام ایشیائی ممالک اور یورپی ممالک میں بھی یہ غیر قانونی دھندہ کامیابی کے ساتھ عروج پا رہا ہے۔

اس خبر میں ہم آپ کو بتائیں گے کہ جعلی کرنسی نوٹ کیسے بنائے جاتے ہیں اور یہ جعلی کرنسی نوٹ بنانے والے لوگ کون ہوتے ہیں۔

جسیا کہ سب جانتے ہیں کہ جعلی کرنسی نوٹ کا استعمال اور اسے اپنے پاس رکھنا انتہائی سنگین جرم تصور کیا جاتا ہے۔ اگر آپ کے پاس جعلی کرنسی نوٹ لگ جائے تو اس سے کیسے بچا جا سکتا ہے اور پولیس اس جرائم کے کرنے والوں کی گرفتاری کے لئے کیا کارروائی کر رہی ہے یہ سب ہم جانیں گے۔

ملزمان جعلی نوٹ بنانے کے لئے بڑی مہارت کے ساتھ جعالسازی کا مظاہرہ کرتے ہیں۔ نقلی کرنسی نوٹ کے لئے استعمال ہونے والے مواد میں شیشے کی سادہ پلیٹس، عام کاغذ، پایوڈین، ایک کٹر اور سادہ صفحات شامل ہوتے ہیں۔ آپ کو یہ بات جان کر حیرانی ہوگی کہ اس خراب کاروبار کے لئے باقاعدہ طور پر لیب ہوتی ہے جہاں یہ سب معاملات ہوتے ہیں اور لوگوں کو بیوقوف بنایا جاتا ہے۔

جعلی نوٹ بنانے کا طریقہ کار:

جعلی نوٹ بنانے کے لئے سب سے پایوڈین کو ایک ٹیشو پر لگایا جاتا ہے پھر ایک سادہ پیپر کو اس کے ساتھ رنگ دیا جاتا ہے۔ اس کے بعد سادہ صفحے میں بند کر کے لپیٹ دیا جاتا ہے۔ اس کام میں ہاتھ کی صفائی ہوتی ہے اور اصلی نوٹ کو پولش کیا جاتا ہے۔

ایسے عالم میں آپ کو اصلی اور نقلی کرنسی میں تمیز کرنا انتہائی ضروری ہے تاکہ جب بھی آپ کے ہاتھ میں کرنسی آئے تو آپ آسانی سے ۔اصلی نوٹ پہچان سکیں۔

1- کرنسی نوٹ کو جانچنے کا ایک طریقہ قائداعظم کی واٹر مارک تصویر ہے جو سامنے کے حصے میں بائیں جانب ہوتی ہے۔نوٹ کو ایک جب کسی سطح پر رکھ کر دیکھا جائے تو ہلکا سفید خاکہ نظر آنے لگتا ہے۔جب نوٹ کو روشنی میں دیکھا جائے تو قائداعظم کی تصویر کرنسی مالیت کے ساتھ نظر آتی ہے۔

2- اگر آپ اپنی انگلی نئے نوٹ کے کاغذ کی سطح پر رگڑیں تو آپ کو سطح میں تبدیلی کا احساس ہوگا۔ اگر آپ کوئی بھی چیز ان باتوں سے ہٹ کر محسوس کریں تو نوٹ کو لینے سے انکار کردیں، جعل ساز واٹر مارک کو تخلیق کرنے کی بجائے پرنٹ کرتے ہیں۔

3- جعلی نوٹوں کی سیاہی عام طور پر گیلی ہونے کے بعد پھیل جاتی ہے اگر آپ کو کسی نوٹ پر شبہ ہو تو اس کا وہ حصہ ڈبو دیں جہاں زیادہ سیاہی استعمال ہوتی ہے اور پھر انگلی سے رگڑیں، اگر وہ خراب نہ ہو تو نوٹ اصلی ہے دوسری صورت میں جعلی ہوگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں